Oops! It appears that you have disabled your Javascript. In order for you to see this page as it is meant to appear, we ask that you please re-enable your Javascript!

چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف کا تربت، تلاراورگوادرکادورہ‘راہداری منصوبوں پرپیشرفت کا جائزہ

اسلام آباد ۔ یکم جنوری (اے پی پی) چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف نے جمعہ کو تربت،تلار اورگوادرکادورہ کیا اورپاک فوج کے انجینئروں کی طرف سے پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت تعمیرکئے جانیوالے منصوبوں پرپیشرفت کاجائزہ لیا ۔ آئی ایس پی آر کی میڈیا ریلیز کے مطابق اپنے دوروں کے دوران آرمی چیف کوبلوچستان بالخصوص مکران ڈویژن میں امن وامان کی صورتحال کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی گئی اورجاری ترقیاتی منصوبوں کے بارے میں آگاہ کیاگیا۔ جنرل راحیل شریف کوبتایا گیا کہ مکران ڈویژن میں سیکیورٹی کی مجموعی صورتحال میں بہتری آئی ہے اورعسکریت پسندی کے گراف میں کافی حد تک کمی واقع ہوئی ہے۔ چیف آف آرمی سٹاف نے آرمی اورقانون نافذ کرنیوالے دیگراداروں کے شہداء اور عام شہریوں کو خراج عقیدت پیش کیا جنہوں نے علاقہ کی سیکیورٹی اورترقی کیلئے اپنی جانوں کے نذرانے پیش کئے ۔ جنرل راحیل شریف نے مکران ڈویژن میں امن کی بحالی کیلئے اٹھائے جانیوالے اقدامات پراطمینان کااظہار کرتے ہوئے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ گوادرپورٹ اوردیگرمنصوبوں پر کام کرنیوالے انجینئروں اور مزدوروں بالخصوص چینی شہریوں کی سیکیورٹی کیلئے سخت اقدامات اٹھائے جائیں۔ پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کے تحت زیرتعمیر منصوبوں اورگوادر پورٹ کی اہمیت کو اجاگر کرتے ہوئے آرمی چیف نے کہاکہ سول حکومت کے ساتھ ملکرگوادر کومقامی اورغیرملکی سرمایہ کاروں کیلئے ایک محفوظ شہربنانے کیلئے تمام ضروری اقدامات اٹھائے جائیں گے۔انہوں نے کہاکہ ان منصوبوں سے پاکستان بالخصوص بلوچستان کے عوام کی زندگی میں تبدیلی اورعلاقے میں خوشحالی آئے گی۔ چیف آف آرمی سٹاف نے متعدد ترقیاتی کاموں میں مصروف فوجی جوانوں بالخصوص ایف ڈبلیو او کی انتھک کوششوں اورقربانیوں کو سراہا جنہوں نے بلوچستان کے طول وعرض میں تمام تر مشکلات کے باوجود حیران کن رفتار سے منصوبوں پرپیشرفت کی۔مقامی عمائدین سے گفتگو کے دوران آرمی چیف نے بلوچستان کی غیوراوربہادر عوام کو بھرپورخراج عقیدت پیش کرتے ہوئے ترقیاتی منصوبوں کیلئے ان کی غیرمشروط حمایت پرتشکرکااظہار کیا اوریقین دلایا کہ ان منصوبوں سے مقامی آبادی کوبھرپوراستفادے کاموقع میسر آئیگا۔ آرمی چیف نے کہا کہ بلوچستان ایک ریجنل حب کی حیثیت سے سامان کی ترسیل اورتوانائی کی تجارت کیلئے انتہائی اہمیت کاحامل ہے۔ انہوں نے آرمی، ایف سی اورقانون نافذ کرنیوالے دیگراداروں کی طرف سے سیکیورٹی کے حوالے سے کی جانیوالی غیرمعمولی کوششوں کو سراہا ۔ انہوں نے کہاکہ ان منصوبوں کی تکمیل براہ راست امن وامان سے منسلک ہے اوراس کا اثرصوبے کے امن وامان پرپڑیگا۔ انہوں نے اس عزم کااظہار کیا کہ مسلح افواج صوبہ میں حالات معمول پرلانے کیلئے تمام ضروری اقدامات اٹھائیں گی۔